الیکشن 2018، وہ حلقے جہاں شوبز کے ستارے بڑے سیاستدانوں کے سامنے ہیں

Artist And Politician

الیکشن 2018، وہ حلقے جہاں شوبز کے ستارے بڑے سیاستدانوں کے سامنے ہیں

الیکشن 2018، وہ حلقے جہاں شوبز کے ستارے بڑے سیاستدانوں کے سامنے ہیں

الیکشن ایک ایسا سیاسی عمل ہے جو جمہوریت کے استحکام کے حوالے سے بنیاد کا پتھر کہے جا سکتے ہیں۔ انتخابی عمل سماجی عمل ہے اس لیے اس میں سماج کے تمام طبقات کو دلچسپی دکھانی چاہیے۔ اس حوالے سے پاکستان کی شوبز انڈسٹری کے اہم ستاروں نے الیکشن 2018میں حصہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ آئیے ہم کو بتاتے ہیں کہ وہ کونسے حلقے ہیں جہاں رنگین دنیا کے ستارے سیاست کے برزجمہروں کے سامنے میدان میں ڈٹ گئے ہیں۔

ابرارالحق بمقابلہ احسن اقبال

نارووال کے حلقہ این اے 78 میں مسلم لیگ کے اہم رہنما احسن اقبال کے سامنے معروف پاپ گلوکار اور تحریک انصاف کے اہم لیڈر ابرارالحق ہیں۔ 2013کے انتخابات میں احسن اقبال نے ابرارالحق کو کو تقریبا بائیس ہزار ووٹوں سے شکست دی تھی۔

جواد احمد بمقابلہ شہبازشریف، عمران خان، بلاول بھٹو

جواد احمد کی پاپ موسیقی سے کون آشنا نہیں مگر اس بار وہ سیاسی میدان میں بھی آپ کو حرکت میں نظر آئیں گے۔ جواد احمد نے ملک کی تینوں بڑی سیاسی جماعتوں کے سربراہوں کے مقابلے میں الیکشن لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ این اے 132میں وہ شہباز شریف کے مقابل ہوں گے، این اے 131میں وہ پی ٹی آئی چیف عمران خان کے مدمقابل ہوں گے، اس کے علاوہ وہ این اے 246کراچی میں بلاول بھٹو زرداری کے خلاف بھی میدان میں موجود ہیں۔

ساجد حسن، ایوب کھوسو اور گل رعنا پی پی پی کے امیدوار

ان دوشوبز شخصیات کے علاوہ این اے 256 کراچی سے معروف ٹی وی ایکٹر ساجد حسن  پی پی پی کی طرف سے قومی اسمبلی کے امیدوار ہیں جبکہ معروف اداکار ایوب کھوسو اور گل رعنا سندھ کے صوبائی حلقوں پی ایس 101 اور94 سے پی پی پی کے امیدوار ہیں۔

تاریخ حوالےسے دیکھیں تو ایسا پہلی بار نہیں ہورہا کہ فلم یا ٹی وی کی شخصیات انتخابی میدان میں اتری ہیں اس سے قبل قوی خان، کنول نعمان، طارق عزیز، عنایت حسین بھٹی اور مصطفی قریشی بھی انتخابات میں حصہ لے چکے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to top