غار میں پھنسی تھائی لینڈ فٹبال ٹیم کے ساتھ کیا ہوا؟

Thailand Football Team

غار میں پھنسی تھائی لینڈ فٹبال ٹیم کے ساتھ کیا ہوا؟

تھائی لینڈ: غارمیں لاپتہ ہونے والی فٹ بال ٹیم کو9 روز بعد ڈھونڈ لیا گیا،غار میں پھنسے تمام لوگ زندہ ہیں،تھائی فوج

غارمیں لاپتہ ہونے والی تھائی لینڈ کی فٹ بال ٹیم کو9 روز بعد ڈھونڈ لیا گیا، تھائی لینڈ کی فوج کا کہنا تھا کہ غار میں پھنسے تمام لوگ زندہ ہیں لیکن انہیں واپسی کے لیے غوطہ خوری سیکھنا ہوگی یا پھر مہینوں سیلاب کے کم ہونے کا انتظار کرنا پڑے گا۔
23 جون کو لاپتہ ہونے والے کوچ اور ٹیم کو برطانوی غوطہ خوروں نے ڈھونڈا، تھائی فوج کے خصوصی غوطہ خوروں نے بچوں تک سامان رسد پہنچایا ہے، حکام کے مطابق اگر بچے سیلاب کے سیزن ختم ہونے سے پہلے واپس آنا چاہتے ہیں تو انہیں غوطہ خوری کی بنیادی تربیت سیکھنی ہوگی لیکن ماہرین کا کہنا ہے غیر تربیت یافتہ غوطہ خوروں کے لیے کیچڑ اور گندے پانی میں تیرنا انتہائی خطرناک ہوسکتا ہے۔

غوطہ خوروں نے ان لاپتہ افراد کا سراغ تھیم لوانگ کی غاروں میں سرچ آپریشن کے دوران لگایا۔فوج کا کہنا ہے کہ غاروں میں پھنسے افراد کے لیے کم از کم آئندہ چارسے پانچ ماہ تک زندہ رہنے کے لیے خوراک پہنچانے کی ضرورت ہے۔لاپتہ افراد کےملنے پر ان کے خاندان والے بہت خوش ہیں۔

غاروں میں لاپتہ ہونے والے افراد کی تلاش میں تھائی نیوی کے خصوصی دستے نے حصہ لیا اور سرچ آپریشن میں دو برطانوی غوطہ خور بھی شامل ہیں جنھوں نے پیر کی شب انھیں تلاش کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا۔
تھائی لینڈ کی بحریہ سیل کی سپیشل فورس نے اپنے فیسبک اکائونٹ پر ایک پوسٹ ڈالی ہے جس میں ایک غوطہ خور پوچھا رہا ہے کہ آپ کتنے افراد ہیں؟ جواب میں وہ کہتے ہیں کہ تیرہ۔غار میں پھنسے ایک لڑکے نے کہا کہ  ’انھیں بتاؤ ہم بھوکے ‘ہیں۔ غار میں پھنسے بچوں میں سب سے کم عمر والا بچہ 11 سال کا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to top