ٹرمپ کو نہیں معلوم پاکستان کہاں ہے؟

ٹرمپ کو نہیں معلوم پاکستان کہاں ہے؟

ٹرمپ نقشے پر پاکستان تلاش نہیں کرسکتے

امریکی صدر ٹرمپ پاکستان سے شدید نفرت کرتے ہیں لیکن حیرت کی بات یہ ہے کہ وہ پاکستان کے متعلق زیادہ نہیں جانتے۔ پاکستانی کالم نگار شاہد جاوید برکی لکھتے ہیں کہ ایک بار واشنگٹن میں ان کی ملاقات ایک ریٹائرڈ لیفٹیننٹ جنرل سے ہوئی۔ یہ جنرل ٹرمپ انتظامیہ میں اہم عہدوں پر فائز کچھ فوجی افسروں کو جانتے تھے۔ ملاقات کے دوران جب ٹرمپ کا ذکر آیا تو جنرل نے کہا کہ ٹرمپ کو پاکستان کے متعلق کچھ بھی معلوم نہیں ہے۔ انہوں نے اس کی مثال یوں دی کہ اگر ایشیا کا ایک نقشہ دیوار پر لٹکا دیا جائے جس پر ممالک کے نام نہ لکھے ہوں تو ٹرمپ پاکستان تو کیا افغانستان کو بھی تلاش نہیں کرسکتے۔ حتیٰ کہ ٹرمپ پاکستان یا افغانستان کی تلاش میں نیپال یا کسی اور ملک کے نقشے پر انگلی رکھ دیں گے۔

ٹرمپ کی پاکستان سے نفرت کی وجہ کیا ہے؟

ٹرمپ پاکستان کے متعلق زیادہ نہیں جانتے پھر بھی پاکستان سے نفرت کرتے ہیں۔ اس کی وجہ امریکی میڈیا میں پاکستان کے خلاف ہونے والا پراپیگنڈہ ہے۔ کیونکہ امریکہ میں یہ تاثر پھیلا دیا گیا ہے کہ امریکی فوج پاکستان کی وجہ سے افغان جنگ ہار رہی ہے۔ اس لئے ٹرمپ نے پاکستان کی امداد بھی روکی اور پاکستان کے خلاف اشتعال انگیز ٹویٹ کرکے اسے دھوکے باز اور جھوٹا بھی قرار دیا۔

ٹرمپ کی کامیابی کا راز کیا ہے؟

یہ کہا جا رہا ہے کہ ٹرمپ کی کامیابی کا راز یہ ہے کہ انہوں نے امریکی معاشرے میں مسلمانوں اور دیگر قوموں سے پائی جانے والی نفرت کا فائدہ اٹھایا ہے۔ امریکی معاشرے میں خاص طور پر سفید فام مرد انتہائی پریشان ہیں۔ انہیں ملک میں ہونے والی سماجی تبدیلیوں پر بھی تکلیف محسوس ہوتی ہے۔ وہ اس بات سے بھی ناراض ہیں کہ دوسرے ممالک سے لوگ آ کر ان کی ملازمتیں چھین رہے ہیں۔ اس معاملے میں نسل پرستی سب سے اہم کردار اد اکررہی ہے اور سفید فام نوجوان سیاہ فاموں سے خطرہ محسوس کررہے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ وہ تیزی سے ٹرمپ کے حامی بنتے جا رہے ہیں اور انہی لوگوں نے ٹرمپ کو کامیاب کروایا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to top